سندھ میں تعلیمی اداروں کو مرحلہ وار کھولنے کا فیصلہ

سندھ میں تعلیمی اداروں کو مرحلہ وار کھولنے کا فیصلہ

سندھ میں تعلیمی اداروں کو مرحلہ وار کھولنے کا فیصلہ

وزیر تعلیم سعید غنی کے مطابق محکمہ تعلیم کی اسٹیرنگ کمیٹی کی سفارشات کے مطابق 15 ستمبر سے کلاس نہم، دہم اور اس  سے اوپر کی کلاسز میں تعلیمی سرگرمیاں شروع ہوں گی۔ ان کا مزید بتانا تھا کہ چھٹی سے آٹھویں تک اسکول 21 ستمبر کو جب کہ پری پرائمری اسکول 28 ستمبر کو کھولے جائیں گے۔ حتمی اعلان 7 ستمبر کو نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر کے اجلاس کے بعد کیا جائے گا۔

جبکہ اجلاس نے اس رپورٹ کی منظوری دی ، وزیر تعلیم سید سعید غنی نے کہا کہ تمام نجی تعلیمی ادارے تدریسی سیشن شروع کرنے کے لیے کمیٹی کے طے شدہ نظام الاوقات پر عمل پیرا ہوں گے۔

مزید پڑھیں: شفقت محمود کی اکتوبر میں اسکول دوبارہ کھولنے کے سلسلے میں "جھوٹی خبروں" پر تنقید

این سی او سی کے اجلاس میں نجی تعلیمی اداروں اورمدارس کے نمائندوں نے شرکت کی تھی اور شرکا نے تعلیمی ادارے کھولنے کے بعد طلبہ کو درپیش خطرات کا جائزہ لیا تھا، انہوں نے مزید بتایا کہ وفاقی وزیر تعلیم کی زیر صدارت ایک اجلاس سات ستمبر کو ہونا ہے، جس کے بعد تعلیمی اداروں کو دوبارہ کھولنے کی آخری تاریخ کا اعلان کیا جائے گا۔

بعد ازاں، ثانوی اور انٹرمیڈیٹ ایجوکیشن کے بورڈز کے چیئرپرسن نے اجلاس کو بتایا کہ گریڈ 9 اور 10 کے طلباء کے نتائج کا اعلان 15 ستمبر کو گریڈ 11 اور 12 طلباء کے نتائج کا اعلان اور 30 ​​ ستمبر کو کیا جائے گا۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ نتائج کے اعلان کے بعد طلباء کی مارک شیٹس ایک ہفتے کے اندر جاری کردی جائیں گی۔

مزید پڑھیں: کے پی حکومت نے سوات میں ویمن یونیورسٹی کے قیام کے لیے اراضی کی منظوری دے دی

سعید غنی نے بتایا کہ متعدد نجی کالجز نے طلباء کو داخلہ دیا تھا اور اب وہ ان سے اپنی مارک شیٹ جمع کروانے کو کہہ رہے ہیں، اس امر کو نظر میں رکھتے ہوئے انہوں نے ہائر سیکنڈری ایڈیشنل سکریٹری کو نجی کالجز سے خط و کتابت کرنے کی ہدایت کی اور انہیں یقین دہانی کرائی کہ نئے طلباء کی مارک شیٹ اپنے نتائج کے اعلان کے بعد ایک ہفتہ کے اندر جاری کردی جائیں گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ کوروناوائرس پھیلنے کی وجہ سے تعلیمی اداروں کی بندش سے تعلیمی سال پر پڑنے والے غیر معمولی اثرات سے بخوبی واقف تھے ، لیکن بچوں کی صحت پر کوئی خطرہ مول نہیں لیا جاسکتا۔

مزید پڑھیں: کے پی کے کی 8 یونیورسٹیز جو بغیر وی سیز کے چل رہی ہیں

دوسری جانب اس سے قبل وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا کہ ملک بھر میں تعلیمی ادارے کھولنے کا حتمی فیصلہ 7 ستمبر کو  کریں گے۔  خیال رہے کہ 27 اگست کو ملک بھر میں تعلیمی اداروں کو کھولنے کے متعلق نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے اجلاس میں روٹیشن پالیسی اپنانے کی تجویز دی گئی تھی۔

تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں ©️ 2021 کیمپس گرو

کیا آپ کے ذہن میں کوئی سوال ہے
ڈسکس کریں

× کلک کریں