وزارتِ تعلیم پنجاب کا بڑا فیصلہ

وزارتِ تعلیم پنجاب کا بڑا فیصلہ

وزارتِ تعلیم پنجاب کا بڑا فیصلہ

راولپنڈی: وزارت تعلیم نے پنجاب بھر میں 2015 میں بھرتی ہونے والے 10 ہزار سے زائد ایجوکیٹرز کے کنٹریکٹ میں توسیع کرنے کی منظوری دے دی۔ یہ کنٹریکٹ اسی ماہ دسمبر کے آخر میں ختم ہورہے تھے اور انہیں موسم سرما کی ان چھٹیوں کے دوران ہی فارغ کرنے کا پہلے فیصلہ کیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں: ٹیوٹا کے ہنرمند نوجوان پروگرام کے دوسرے مرحلے کا آغاز

وزارت تعلیم کی طرف سے تمام ڈسٹرکٹ تعلیمی افسران اور اتھارٹیز کو باقاعدہ سرکلر جاری کر دیا گیا ہے جس میں اتھارٹیز کو ان کی ممکنہ برطرفی سے روک دیا گیا ہے اور اکاؤنٹ افسران کو انہیں معمول میں 30 دسمبر کو تنخواہوں کی ادائیگی کے بھی احکامات جاری کر دئیے گئیے ہیں۔

مزید پڑھیں: دس ہزار ایجوکیٹرز کے کونٹریکٹ میں توسیع فیصلہ

سرکلر میں کہا گیا ہے کے پہلے مرحلہ میں کنٹریکٹ میں توسیع کی جائے گی جس کے بعد ان تمام ایجوکیٹرز کو ریگولر کر دیا جائے گا یہ ایجوکیٹرز 5 سال کے کنٹریکٹ پر بھرتی کئے گئے تھے جن میں خواتین ٹیچرز کی بڑی تعداد بھی شامل تھی اس فیصلہ سے کنٹریکٹ ٹیچرز میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے۔

تمام مواد کے جملہ حقوق محفوظ ہیں ©️ 2021 کیمپس گرو

کیا آپ کے ذہن میں کوئی سوال ہے
ڈسکس کریں

× کلک کریں